news

طالبان سے برطانوی سفارت کاروں کی پہلی باضابطہ ملاقات

کابل:(بدھ: 06 اکتوبر 2021)  افغانستان میں امارات اسلامیہ سے براطانوی سفیروں نے باضابطہ ملاقات کی اور دونو ں جانب سے مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ افغانستان کے نائب وزیراعظم ملا برادر اور وزیر خارجہ امیر خان متقی سے برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن کے نمائندہ خصوصی سائمن گاس نے وفد کے ہمراہ کابل میں علیحدہ علیحدہ ملاقاتیں کیں۔

برطانوی سفارت کاروں اور طالبان کے درمیان پہلی ملاقات پانچ اکتوبر منگل کے روز کابل میں ہوئی، برطانوی دفتر خارجہ نے اس حوالے سے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ افغانستان کے لیے اس کے خصوصی سفیر سائمن گاس اور برطانوی سفارت خانے کے مارٹن لونگڈین نے طالبان رہنماؤں سے ملاقات کی ہے۔

ملاقات میں سائمن گاس نے افغانستان میں اقلیتوں کے ساتھ سلوک اور عورتوں اور لڑکیوں کے تحفظ اور حقوق کا معاملہ بھی اٹھایا۔ بیان کے مطابق ملاقات کے دوران انسانی بحران سے نمٹنے کے لیے افغانستان کو درکار امداد پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

طالبان کی جانب سے ایک بیان میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ اس ملاقات میں دوبارہ سفارتی تعلقات بحال کرنے سے متعلق بھی بات چیت ہوئی۔ یہ بات چیت انسانی بحران سے نمٹنے، سکیورٹی کی صورت حال اور دہشت گردی کے مسائل پر مرکوز تھی۔ برطانوی اور جو افغان شہری ملک سے باہر جانا چاہتے ہیں ان کے لیے محفوظ راستہ فراہم کرنے کے ساتھ ہی خواتین کے حقوق پر بھی بات چیت میں توجہ مرکوز کی گئی۔