news-details
کراچی

وزارت خزانہ کے پاس مخصوص رقم ہوتی ہے، کوشش کریں گے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں برقرار رکھیں: مفتاح اسماعیل

کراچی:(جمعرات: 05 مئي 2022ع) وفاقی وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے کہا ہے کہ عمران نیازی کے قول و فعل میں تضاد ہے، سابق حکومت نے ملک کیلئے معاشی مشکلات پیدا کیں۔ کوشش کریں گے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں برقرار رکھیں۔
میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کا کہنا تھا کہ پوری حکومت چلانےکا ماہانہ خرچہ 45ارب روپے ہے، ڈیزل پر حکومت کو فی لٹر70 روپے نقصان ہو رہا ہے، پٹرول اور ڈیزل کی قیمت بڑھنے پر پیسہ ہماری جیب میں نہیں جاتا۔ حکومت کے پاس پیسے نہ ہونے پر قرض لینا پڑتا ہے، پٹرولیم مصنوعات پر سیلز ٹیکس اور لیوی عائد نہیں کریں گے، پٹرول کی قیمت بڑھنےسےعوام کی قوت خرید پر بوجھ پڑتا ہے، پٹرولیم مصنوعات پر سبسڈی دینےکی کوشش کریں گے۔
انہوں نے کہا کہ رواں ماہ حکومت کو102ارب روپےکا اضافی بوجھ برداشت کرنا پڑے گا، وزارت خزانہ کے پاس مخصوص رقم ہوتی ہے، حکومت پٹرول پر 30 روپے فی لٹر نقصان برداشت کر رہی ہے، پٹرول کی قیمت بڑھنے سے اشیائے خورونوش کی قیمتوں پر بھی اثرہوتا ہے۔ عمران خان نے آئی ایم ایف سے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کا معاہدہ کیا، تحریک عدم اعتماد آئی تو پٹرول 149روپے کا کر دیا، عمران خان کے معاہدے کے مطابق پٹرول کی قیمت 245 ہونی چاہیے تھی۔ سابق حکومت نے ملک کیلئے معاشی مشکلات پیدا کیں۔