news-details

اسلام آباد ہائیکورٹ نے آبپارہ میلوڈی روڈ فوری کھولنے کا حکم دے دیا

اسلام آباد: (بدھ: 05 اکتوبر2022ء) اسلام آباد ہائیکورٹ نے شہر اقتدار کی آبپارہ میلوڈی روڈ فوری کھولنے کا حکم دے دیا ہے۔ وفاقی دارالحکومت میں سڑکوں کی بندش کے خلاف آج بروز بدھ 5 اکتوبر کو کیس کی سماعت ہوئی۔ اس موقع پر درخواست گزار کے وکیل کا کہنا تھا کہ لال مسجد کے باہر روڈ بند ہے۔
آج ہونے والی سماعت میں ڈپٹی کمشنر عرفان نواز عدالت کے سامنے پیش ہوئے اور بتایا کہ مولانا صاحب کا مدرسہ ہے اور اُن کے شاگرد اکثر احتجاج کے طور پر سڑک بلاک کردیتے ہیں۔ ہم اُن سے مذاکرات کرتے ہیں۔ عدالت نے جواب دیا تو پھر افغانستان، بھارت اور اسرائیل سے بھی مذاکرات کرلیں تاکہ وہ معاملہ بھی حل ہو جائے۔ عدالت نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ جائیں اور جا کر لال مسجد کے باہر کی روڈ کھولیں۔
درخواست گزار کے وکیل نے کہا کہ آبپارہ والی سائیڈ بھی راستہ بند ہے۔ اس کا نام نہیں لینا چاہتا، عدالت نے ریمارکس دیے آئی ایس آئی ہیڈ کوارٹرز کے باہر تو کوئی راستہ بند نہیں۔ اچھے وقتوں میں وہ رستہ بھی عدالت کے حکم پر کھل گیا تھا۔ جسٹس محسن اختر کیانی نے کہا کہ اپنے حقوق کے لیے پبلک اپنے نمائندوں کے پاس جائے۔ درخواست گزار کے وکیل نے کہا کہ قانون سب کے لیے ہو صرف چند لوگوں کے ہاتھوں یرغمال نہیں بننا چاہیے۔
عدالت نے ریمارکس دیئے کہ زمینی حقائق یہی ہیں کہ ملک ابھی چند افراد کے مطابق ہی چل رہا ہے اور عدلیہ بحال ہو کر بھی وکلا کے ہاتھوں قید ہے۔ اسلام آباد میں سڑکوں کی بندش سے متعلق حکم جاری کریں گے۔